Home / علامہ اقبال شاعری / ضرب کلیم / اسلام اور مسلمان

اسلام اور مسلمان

اسلام اور مسلمان Archives – Urdu Poetry Club

قم باذن اللہ

Jahan Agerchy Digrgoo Hy, Qum Be-Iznillah

جہاں اگرچہ دگر گوں ہے ، قم باذن اللہ وہی زميں ، وہی گردوں ہے ، قم باذن اللہ کيا نوائے ‘اناالحق’ کو آتشيں جس نے تری رگوں ميں وہی خوں ہے ، قم باذن اللہ غميں نہ ہو کہ پراگندہ ہے شعور ترا فرنگيوں کا يہ افسوں ہے ، …

Read More »

موت

Lahd May Bhe Yahi Gaib o Hazoor Rehta Hy

لحد ميں بھی يہی غيب و حضور رہتا ہے اگر ہو زندہ تو دل ناصبور رہتا ہے مہ و ستارہ ، مثال شرارہ يک دو نفس مے خودی کا ابد تک سرور رہتا ہے فرشتہ موت کا چھوتا ہے گو بدن تيرا ترے وجود کے مرکز سے دور رہتا ہے

Read More »

احکام الہی

Pabendi Taqdeer Keh Pabendi Ahkaam

پابندی تقدير کہ پابندی احکام يہ مسئلہ مشکل نہيں اے مرد خرد مند اک آن ميں سو بار بدل جاتی ہے تقدير ہے اس کا مقلد ابھی ناخوش ، ابھی خورسند تقدير کے پابند نباتات و جمادات مومن فقط احکام الہی کا ہے پابند

Read More »

امرائے عرب سے

Kry Ye Kafir Hindi Bhe Jurrat Guftaar

کرے يہ کافر ہندی بھی جرات گفتار اگر نہ ہو امرائے عرب کی بے ادبی! يہ نکتہ پہلے سکھايا گيا کس امت کو؟ وصال مصطفوی ، افتراق بولہبی نہيں وجود حدود و ثغور سے اس کا محمد عربی سے ہے عالم عربی ———————— بھوپال شيش محل ميں لکھے گئے

Read More »

لاوالا

Fizaay Noor May Kerta Na Shaakh o Burg o Ber Paida

فضائے نور ميں کرتا نہ شاخ و برگ و بر پيدا سفر خاکی شبستاں سے نہ کر سکتا اگر دانہ نہاد زندگی ميں ابتدا ‘لا’ ، انتہا ‘الا’ پيام موت ہے جب ‘لا ہوا الا’ سے بيگانہ وہ ملت روح جس کی ‘لا ‘سے آگے بڑھ نہيں سکتی يقيں جانو، …

Read More »

اشاعت اسلام فرنگستان ميں

Zameer Is Mdniyyt Ka Deen say Hy Khali

ضمير اس مدنيت کا ديں سے ہے خالی فرنگيوں ميں اخوت کا ہے نسب پہ قيام بلند تر نہيں انگريز کی نگاہوں ميں قبول دين مسيحی سے برہمن کا مقام اگر قبول کرے، دين مصطفی ، انگريز سياہ روز مسلماں رہے گا پھر بھی غلام

Read More »

آزادی

Bykus Ki Ye Jurrat Keh Musliman Ko Tokay

ہے کس کی يہ جرات کہ مسلمان کو ٹوکے حريت افکار کی نعمت ہے خدا داد چاہے تو کرے کعبے کو آتش کدہ پارس چاہے تو کرے اس ميں فرنگی صنم آباد قرآن کو بازيچہ تاويل بنا کر چاہے تو خود اک تازہ شريعت کرے ايجاد ہے مملکت ہند ميں …

Read More »

مرد مسلمان

Her Lehza Hy Momin Ki Nai Shaan Nai Aan

ہرلحظہ ہے مومن کی نئی شان، نئی آن گفتار ميں، کردار ميں، اللہ کی برہان قہاری و غفاری و قدوسی و جبروت يہ چار عناصر ہوں تو بنتا ہے مسلمان ہمسايہء جبريل اميں بندۂ خاکی ہے اس کا نشيمن نہ بخارا نہ بدخشان يہ راز کسی کو نہيں معلوم کہ …

Read More »

مہدی

Qoumun Ki Haayat Inky Takhyyul Pay Hy Moqoof

قوموں کی حيات ان کے تخيل پہ ہے موقوف يہ ذوق سکھاتا ہے ادب مرغ چمن کو مجذوب فرنگی نے بہ انداز فرنگی مہدی کے تخيل سے کيا زندہ وطن کو اے وہ کہ تو مہدی کے تخيل سے ہے بيزار نوميد نہ کر آہوئے مشکيں سے ختن کو ہو …

Read More »

اے پير حرم

Ay Peer e Haram! Rasem o Raah Khanqahi Choor

اے پير حرم! رسم و رہ خانقہی چھوڑ مقصود سمجھ ميری نوائے سحری کا اللہ رکھے تيرے جوانوں کو سلامت دے ان کو سبق خود شکنی ، خود نگری کا تو ان کو سکھا خارا شگافی کے طريقے مغرب نے سکھايا انھيں فن شيشہ گری کا دل توڑ گئی ان …

Read More »

آدم

Talsum Bood o Adam, Jis Ka Naam Hay Aadam

طلسم بود و عدم، جس کا نام ہے آدم خدا کا راز ہے، قادر نہيں ہے جس پہ سخن زمانہ صبح ازل سے رہا ہے محو سفر مگر يہ اس کی تگ و دو سے ہو سکا نہ کہن اگر نہ ہو تجھے الجھن تو کھول کر کہہ دوں، ‘وجود …

Read More »

نبوت

Main Na Aarif Na Mujadded Na Muhaddis Na Fiqeh

ميں نہ عارف ، نہ مجدد، نہ محدث ،نہ فقيہ مجھ کو معلوم نہيں کيا ہے نبوت کا مقام ہاں، مگر عالم اسلام پہ رکھتا ہوں نظر فاش ہے مجھ پہ ضمير فلک نيلی فام عصر حاضر کی شب تار ميں ديکھی ميں نے يہ حقيقت کہ ہے روشن صفت …

Read More »

جان و تن

Aql Muddat Say Hay is Paychaak May Ulghi Hoi

عقل مدت سے ہے اس پيچاک ميں الجھی ہوئی روح کس جوہر سے، خاک تيرہ کس جوہر سے ہے ميری مشکل، مستی و شور و سرور و درد و داغ تيری مشکل، مے سے ہے ساغر کہ مے ساغر سے ہے ارتباط حرف و معنی، اختلاط جان و تن جس …

Read More »

الہام اور آزادی

Ho Bnda Azaad Agr Sahib E Ilhaam

ہو بندہ آزاد اگر صاحب الہام ہے اس کی نگاہ فکروعمل کے لیے مہمیز اس کے نفس گرم کی تاثیر ہے ایسی ھو جاتی ہے خاک چمنستان شرر آمیز شاہیں کی ادا ھوتی ہے بلبل میں نمودار کس درجہ بدل جاتے ہیں مرغان سحر خیز اس مرد خود آگاہ خدامست …

Read More »

نکتہ توحيد

Biyyan May Nukta e Toheed Aa To Sakta Hy

بياں ميں نکتہ توحيد آ تو سکتا ہے ترے دماغ ميں بت خانہ ہو تو کيا کہيے وہ رمز شوق کہ پوشيدہ لاالہ ميں ہے طريق شيخ فقيہانہ ہو تو کيا کہيے سرور جو حق و باطل کی کارزار ميں ہے تو حرب و ضرب سے بيگانہ ہو تو کيا …

Read More »

تسليم و رضا

Her Shakh Say Ye Nukta Paycheedah Hy Paida

ہر شاخ سے يہ نکتہ پيچيدہ ہے پيدا پودوں کو بھی احساس ہے پہنائے فضا کا ظلمت کدۂ خاک پہ شاکر نہيں رہتا ہر لحظہ ہے دانے کو جنوں نشوونما کا فطرت کے تقاضوں پہ نہ کر راہ عمل بند مقصود ہے کچھ اور ہی تسليم و رضا کا جرات …

Read More »

غزل

Tere Mtta e Hayyat, Ilm o Huner Ka Saroor

تيری متاع حيات، علم و ہنر کا سرور تيری متاع حيات، علم و ہنر کا سرور ميری متاع حيات ايک دل ناصبور معجزہ اہل فکر، فلسفہء پيچ پيچ معجزہ اہل ذکر، موسی و فرعون و طور مصلحتاً کہہ ديا ميں نے مسلماں تجھے تيرے نفس ميں نہيں، گرمی يوم النشور …

Read More »

فقر و راہبی

Kuch Aur Cheez Hy Shayd Tere Muslmani

کچھ اور چيز ہے شايد تری مسلمانی تری نگاہ ميں ہے ايک ، فقر و رہبانی سکوں پرستی راہب سے فقر ہے بيزار فقير کا ہے سفينہ ہميشہ طوفانی پسند روح و بدن کی ہے وا نمود اس کو کہ ہے نہايت مومن خودی کی عريانی وجود صيرفی کائنات ہے …

Read More »

امامت

Tony Poochi Hy Imamt Ki Haqeeqt Mjh Say

تو نے پوچھي ہے امامت کی حقيقت مجھ سے حق تجھے ميری طرح صاحب اسرار کرے ہے وہی تيرے زمانے کا امام برحق جو تجھے حاضر و موجود سے بيزار کرے موت کے آئنے ميں تجھ کو دکھا کر رخ دوست زندگی تيرے ليے اور بھی دشوار کرے دے کے …

Read More »

مدنيت اسلام

Btaaun Tjhko Musliman Ki Zindagi Kia Hy

بتاؤں تجھ کو مسلماں کی زندگی کيا ہے يہ ہے نہايت انديشہ و کمال جنوں طلوع ہے صفت آفتاب اس کا غروب يگانہ اور مثال زمانہ گونا گوں نہ اس ميں عصر رواں کی حيا سے بيزاری نہ اس ميں عہد کہن کے فسانہ و افسوں حقائق ابدی پر اساس …

Read More »

اے روح محمد صلی اللہ علیہ وسلم

Sherazah Hwa Millat Marhoom Ka Abter

شيرازہ ہوا ملت مرحوم کا ابتر اب تو ہی بتا، تيرا مسلمان کدھر جائے وہ لذت آشوب نہيں بحر عرب ميں پوشيدہ جو ہے مجھ ميں، وہ طوفان کدھر جائے ہر چند ہے بے قافلہ و راحلہ و زاد اس کوہ و بياباں سے حدی خوان کدھر جائے اس راز …

Read More »

تقدير

Na Ahl Ko Hasil Hay Kbhi Qowwat o Jabroot

نااہل کو حاصل ہے کبھی قوت و جبروت ہے خوار زمانے ميں کبھی جوہر ذاتی شايد کوئی منطق ہو نہاں اس کے عمل ميں تقدير نہيں تابع منطق نظر آتی ہاں، ايک حقيقت ہے کہ معلوم ہے سب کو تاريخ امم جس کو نہيں ہم سے چھپاتی ‘ہر لحظہ ہے …

Read More »

مومن

Ho Halqa e Yaaran To BReesham Ki Trha Narem

دنيا ميں ہو حلقہ ياراں تو بريشم کی طرح نرم رزم حق و باطل ہو تو فولاد ہے مومن افلاک سے ہے اس کی حريفانہ کشاکش خاکی ہے مگر خاک سے آزاد ہے مومن جچتے نہيں کنجشک و حمام اس کی نظر ميں جبريل و سرافيل کا صياد ہے مومن …

Read More »

مہدی برحق

Sab Apnay Bnaay Hooy Zindaan May Hain Mehboos

سب اپنے بنائے ہوئے زنداں ميں ہيں محبوس خاور کے ثوابت ہوں کہ افرنگ کے سيار پيران کليسا ہوں کہ شيخان حرم ہوں نے جدت گفتار ہے، نے جدت کردار ہيں اہل سياست کے وہی کہنہ خم و پيچ شاعر اسی افلاس تخيل ميں گرفتار دنيا کو ہے اس مہدی …

Read More »

مردان خدا

Wohi Hay Bnda e Hur Jiski Zarb Hay Kaari

وہی ہے بندۂ حر جس کی ضرب ہے کاری نہ وہ کہ حرب ہے جس کی تمام عياری ازل سے فطرت احرار ميں ہيں دوش بدوش قلندری و قبا پوشی و کلہ داری زمانہ لے کے جسے آفتاب کرتا ہے انھی کی خاک ميں پوشيدہ ہے وہ چنگاری وجود انھی …

Read More »

فلسفہ

Afkaar Jawaanu Ki Khiffi Hun ya Jilli Hun

افکار جوانوں کے خفی ہوں کہ جلی ہوں پوشيدہ نہيں مرد قلندر کی نظر سے معلوم ہيں مجھ کو ترے احوال کہ ميں بھی مدت ہوئی گزرا تھا اسی راہ گزر سے الفاظ کے پيچوں ميں الجھتے نہيں دانا غواص کو مطلب ہے صدف سے کہ گہر سے پيدا ہے …

Read More »

قلندر کی پہچان

Kehta Hay Zaamany Say Ye Darweesh Jawan Mard

کہتا ہے زمانے سے يہ درويش جواں مرد جاتا ہے جدھر بندۂ حق، تو بھی ادھر جا ہنگامے ہيں ميرے تری طاقت سے زيادہ بچتا ہوا بنگاہ قلندر سے گزر جا ميں کشتی و ملاح کا محتاج نہ ہوں گا چڑھتا ہوا دريا ہے اگر تو تو اتر جا توڑا …

Read More »

مستی کردار

Soofi Ki Tareeqat May Faqt Masti Ahwaal

صوفی کی طريقت ميں فقط مستی احوال ملا کی شريعت ميں فقط مستی گفتار شاعر کی نوا مردہ و افسردہ و بے ذوق افکار ميں سرمست، نہ خوابيدہ نہ بيدار وہ مرد مجاہد نظر آتا نہيں مجھ کو ہو جس کے رگ و پے ميں فقط مستی کردار

Read More »

شکست

Mujahidana Harart Rahi Na Soofi May

مجاہدانہ حرارت رہی نہ صوفی ميں بہانہ بے عملی کا بنی شراب الست فقيہ شہر بھی رہبانيت پہ ہے مجبور کہ معرکے ہيں شريعت کے جنگ دست بدست گريز کشمکش زندگی سے، مردوں کی اگر شکست نہيں ہے تو اور کيا ہے شکست ————————— رياض منزل (دولت کدہ سرراس مسعود) …

Read More »

وحی

Aql By-Mayya Imamt Ki Szawaar Nhi

عقل بے مايہ امامت کی سزاوار نہيں راہبر ہو ظن و تخميں تو زبوں کار حيات فکر بے نور ترا، جذب عمل بے بنياد سخت مشکل ہے کہ روشن ہو شب تار حيات خوب و ناخوب عمل کی ہو گرہ وا کيونکر گر حيات آپ نہ ہو شارح اسرار حيات

Read More »

دنيا

Mjhko Bhe Nazer Aati Hay Ye Boqlmooni

مجھ کو بھی نظر آتی ہے يہ بوقلمونی وہ چاند، يہ تارا ہے، وہ پتھر، يہ نگيں ہے ديتی ہے مری چشم بصيرت بھی يہ فتوی وہ کوہ ، يہ دريا ہے ، وہ گردوں ، يہ زميں ہے حق بات کو ليکن ميں چھپا کر نہيں رکھتا تو ہے، …

Read More »

غزل

Dil Murda Nhi Hy, Isy Zinda Ker Dobara

دل مردہ دل نہيں ہے،اسے زندہ کر دوبارہ کہ يہی ہے امتوں کے مرض کہن کا چارہ ترا بحر پر سکوں ہے، يہ سکوں ہے يا فسوں ہے؟ نہ نہنگ ہے، نہ طوفاں، نہ خرابی کنارہ! تو ضمير آسماں سے ابھی آشنا نہيں ہے نہيں بے قرار کرتا تجھے غمزہ …

Read More »

ہندی اسلام

Hy Zinda Faqt Wahdett Afkaar Say Millat

ہے زندہ فقط وحدت افکار سے ملت وحدت ہو فنا جس سے وہ الہام بھی الحاد وحدت کی حفاظت نہيں بے قوت بازو آتی نہيں کچھ کام يہاں عقل خدا داد اے مرد خدا! تجھ کو وہ قوت نہيں حاصل جا بيٹھ کسی غار ميں اللہ کو کر ياد مسکينی …

Read More »

تصوف

Ye Hikmat Malkoti, Ye Ilm Lahooti

يہ حکمت ملکوتی، يہ علم لاہوتی حرم کے درد کا درماں نہيں تو کچھ بھی نہيں يہ ذکر نيم شبی ، يہ مراقبے ، يہ سرور تری خودی کے نگہباں نہيں تو کچھ بھی نہيں يہ عقل، جو مہ و پرويں کا کھيلتی ہے شکار شريک شورش پنہاں نہيں تو …

Read More »

افرنگ زدہ

Tera Wajood Sarapa Tajjli Afrang

(1) ترا وجود سراپا تجلی افرنگ کہ تو وہاں کے عمارت گروں کی ہے تعمير مگر يہ پيکر خاکی خودی سے ہے خالی فقط نيام ہے تو، زرنگار و بے شمشير (2) تری نگاہ ميں ثابت نہيں خدا کا وجود مری نگاہ ميں ثابت نہيں وجود ترا وجود کيا ہے، …

Read More »

سلطانی

Ksy Khaber Keh Hzaarun Mukaam Rakhta Hy

کسے خبر کہ ہزاروں مقام رکھتا ہے وہ فقر جس ميں ہے بے پردہ روح قرآنی خودی کو جب نظر آتی ہے قاہری اپنی يہی مقام ہے کہتے ہيں جس کو سلطانی يہی مقام ہے مومن کی قوتوں کا عيار اسی مقام سے آدم ہے ظل سبحانی يہ جبر و …

Read More »

اسلام

Rooh Islam Ki Hy Noor Khudi, Naar Khudi

روح اسلام کی ہے نور خودی ، نار خودی زندگانی کے ليے نار خودی نور و حضور يہی ہر چيز کی تقويم ، يہی اصل نمود گرچہ اس روح کو فطرت نے رکھا ہے مستور لفظ ‘اسلام، سے يورپ کو اگر کد ہے تو خير دوسرا نام اسی دين کا …

Read More »

قوت اور دين

Iskandar-o-Changaiz Ke Hathon Se Jahan Mein

اسکندر و چنگيز کے ہاتھوں سے جہاں ميں سو بار ہوئی حضرت انساں کی قبا چاک تاريخ امم کا يہ پيام ازلی ہے ‘صاحب نظراں! نشہ قوت ہے خطرناک، اس سيل سبک سير و زميں گير کے آگے عقل و نظر و علم و ہنر ہيں خس و خاشاک لا …

Read More »

جہاد

Fatwa Hai Sheikh Ka Ye Zamana Qalam Ka

فتویِِ’ ہے شيخ کا يہ زمانہ قلم کا ہے دنيا ميں اب رہی نہيں تلوار کارگر ليکن جناب شيخ کو معلوم کيا نہيں؟ مسجد ميں اب يہ وعظ ہے بے سود و بے اثر تيغ و تفنگ دست مسلماں ميں ہے کہاں ہو بھی، تو دل ہيں موت کی لذت …

Read More »

آزادی شمشير کے اعلان پر

Socha Bhi Hay Ay Mard E Musliman Kbhi To Ny

سوچا بھی ہے اے مرد مسلماں کبھی تو نے کيا چيز ہے فولاد کی شمشير جگردار اس بيت کا يہ مصرع اول ہے کہ جس ميں پوشيدہ چلے آتے ہيں توحيد کے اسرار ہے فکر مجھے مصرع ثانی کی زيادہ اللہ کرے تجھ کو عطا فقر کی تلوار قبضے ميں …

Read More »