Afkaar Jawaanu Ki Khiffi Hun ya Jilli Hun

فلسفہ

افکار جوانوں کے خفی ہوں کہ جلی ہوں
پوشيدہ نہيں مرد قلندر کی نظر سے
معلوم ہيں مجھ کو ترے احوال کہ ميں بھی
مدت ہوئی گزرا تھا اسی راہ گزر سے
الفاظ کے پيچوں ميں الجھتے نہيں دانا
غواص کو مطلب ہے صدف سے کہ گہر سے
پيدا ہے فقط حلقہ ارباب جنوں ميں
وہ عقل کہ پا جاتی ہے شعلے کو شرر سے
جس معنی پيچيدہ کی تصديق کرے دل
قيمت ميں بہت بڑھ کے ہے تابندہ گہر سے

يا مردہ ہے يا نزع کی حالت ميں گرفتار
جو فلسفہ لکھا نہ گيا خون جگر سے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے