Home / علامہ اقبال شاعری / تري دعا سے قضا تو بدل نہيں سکتي
Tere Doa Say Qaza To Badal Nhi Sakti

تري دعا سے قضا تو بدل نہيں سکتي

تري دعا سے قضا تو بدل نہيں سکتي
مگر ہے اس سے يہ ممکن کہ تو بدل جائے
تري خودي ميں اگر انقلاب ہو پيدا
عجب نہيں ہے کہ يہ چار سو بدل جائے
وہي شراب ، وہي ہاے و ہو رہے باقي
طريق ساقي و رسم کدو بدل جائے

تري دعا ہے کہ ہو تيري آرزو پوري
مري دعا ہے تري آرزو بدل جائے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے