Na Main Aajmi Na Main Hindi, Na Iraqi o Hijazi

غزل

نہ ميں اعجمي نہ ہندي ، نہ عراقي و حجازي
کہ خودي سے ميں نے سيکھي دوجہاں سے بے نيازي
تو مري نظر ميں کافر ، ميں تري نظر ميں کافر
ترا ديں نفس شماري ، مرا ديں نفس گدازي
تو بدل گيا تو بہتر کہ بدل گئي شريعت
کہ موافق تدرواں نہيں دين شاہبازي
ترے دشت و در ميں مجھ کو وہ جنوں نظر نہ آيا
کہ سکھا سکے خرد کو رہ و رسم کارسازي

نہ جدا رہے نوا گر تب و تاب زندگي سے
کہ ہلاکي امم ہے يہ طريق نے نوازي

 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے