Hay Gila Mjhko Tere Lazzat Paidaai Ka

اپنے شعر سے

ہے گلہ مجھ کو تری لذت پيدائی کا
تو ہوا فاش تو ہيں اب مرے اسرار بھی فاش

شعلے سے ٹوٹ کے مثل شرر آوارہ نہ رہ
کر کسی سينہ پر سوز ميں خلوت کی تلاش

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے