گرچہ تو زنداني اسباب ہے

گرچہ تو زنداني اسباب ہے
قلب کو ليکن ذرا آزاد رکھ
عقل کو تنقيد سے فرصت نہيں
عشق پر اعمال کي بنياد رکھ
اے مسلماں! ہر گھڑي پيش نظر
آيہ ‘لا يخلف الميعاد’ رکھ
يہ ‘لسان العصر’ کا پيغام ہے
‘ان وعد اللہ حق” ياد رکھ”

About محمد نظام الدین عثمان

Check Also

Is Byhas Ka Kuch Faisla Main Naheen Kar Sakta

آزادی نسواں

اس بحث کا کچھ فيصلہ ميں کر نہيں سکتا گو خوب سمجھتا ہوں کہ يہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے