Home / علامہ اقبال شاعری / با نگ درا / بانگ درا (حصہ اول) / ہندوستانی بچوں کا قومی گيت

ہندوستانی بچوں کا قومی گيت


چشتیي نے جس زميں ميں پيغام حق سنايا
نانک نے جس چمن ميں وحدت کا گيت گايا
تاتاريوں نے جس کو اپنا وطن بنايا
جس نے حجازيوں سے دشت عرب چھڑايا

ميرا وطن وہی ہے ، ميرا وطن وہی ہے

يونانيوں کو جس نے حيران کر ديا تھا
سارے جہاں کو جس نے علم و ہنر ديا تھا
مٹی کو جس کی حق نے زر کا اثر ديا تھا
ترکوں کا جس نے دامن ہيروں سے بھر ديا تھا

ميرا وطن وہی ہے، ميرا وطن وہی ہے

ٹوٹے تھے جو ستارے فارس کے آسماں سے
پھر تاب دے کے جس نے چمکائے کہکشاں سے
وحدت کی لے سنی تھی دنيا نے جس مکاں سے
مير عرب کو آئی ٹھنڈی ہوا جہاں سے

ميرا وطن وہی ہے، ميرا وطن وہی ہے

بندے کليم جس کے ، پربت جہاں کے سينا
نوح نبی کا آ کر ٹھہرا جہاں سفينا
رفعت ہے جس زميں کی بام فلک کا زينا
جنت کی زندگی ہے جس کی فضا ميں جينا

ميرا وطن وہی ہے، ميرا وطن وہی ہے

————-

Transliteration

Hindustani Bachon Ka Qoumi Geet

Chishti (R.A.) Ne Jis Zameen Mein Pegham-e-Haq Sunaya
Nanak Ne Jis Chaman Mein Wahdat Ka Geet Gaya

Tatariyon Ne Jis Ko Apna Watan Banaya
Jis Ne Hijaziyon Se Dast-e-Arab Chhuraya

Mera Watan Wohi Hai, Mera Watan Wohi Hai

Yunanion Ko Jis Ne Heeran Kar Diya Tha
Sare Jahan Ko Jis Ne Ilm-o-Hunar Diya Tha

Mitti Ko Jis Ki Haq Ne Zr Ka Asar Diya Tha
Turkon Ka Jis Ne Daman Heeron Se Bhar Diya Tha

Mera Watan Wohi Hai, Mera Watan Wohi Hai

Toote The Jo Stare Faras Ke Asman Se
Phir Taab De Ke Jis Ne Chamkaye Kehkashan Se

Wahdat Ki Laiy Suni Thi Dunya Ne Jis Makan Se
Meer-e-Arab (S.A.W.) Ko Aayi Thandi Hawa Jahan Se

Mera Watan Wohi Hai, Mera Watan Wohi Hai

Bande Kaleem Jis Ke, Parbat Jahan Ke Seena
Nooh (A.S.)-e-Nabi Ka Aa Kar Thehra Jahan Safeena

Riffat Hai Jis Zameen Ki Baam-e-Falak Ka Zeena

Jannat Ki Zindagi Hai Jis Ki Faza Mein Jeena

Mera Watan Wohi Hai, Mera Watan Wohi Hai

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے